کیا کسبِ معاش کیلئے اکثرسفرپررہنے والا شخص رمضان کا روزہ چھوڑ سکتا ہے؟

وصف

سوال: میں ایک مزدور آدمی ہوں ، کسبِ معاش کےلیے اکثر میں سفر پر رہتاہوں،اورسفر میں فرض نمازوں کو ہمیشہ جمع کرکے پڑھتا ہوں،اورماہ رمضان میں روزے کو توڑدیتا ہوں، توکیا میرا ایسا کرنا صحیح ہے ؟

Download
اس پیج کے ذمّے دار کو اپنا تبصرہ لکھیں

کامل بیان

کیا کسبِ معاش کیلئے اکثرسفرپررہنے والا شخص رمضان کا روزہ چھوڑ سکتا ہے؟

[الأُردية –اُردو Urdu]

فتوی :دائمی کمیٹی برائے علمی تحقیقات وافتاء(سعودی عرب)

—™

ترجمہ: اسلام سوال وجواب سائٹ

مراجعہ وتنسیق:اسلام ہاؤس ڈاٹ کام

 رجل كثير السفر لطلب الرزق فهل يُفطر في رمضان؟

فتوى:اللجنة الدائمة للبحوث العلمية والإفتاءبالمملكة العربية السعودية

—™

ترجمة: موقع الإسلام سؤال وجواب

مراجعة وتنسيق:موقع دارالإسلام

کیا کسبِ معاش کیلئے اکثرسفرپررہنے والا شخص رمضان کا روزہ چھوڑ سکتا ہے؟

27027:سوال: میں ایک مزدور آدمی ہوں ، کسبِ معاش کےلیے اکثر میں سفر پر رہتاہوں،اورسفر میں فرض نمازوں کو ہمیشہ جمع کرکے پڑھتا ہوں،اورماہ رمضان میں روزے کو توڑدیتا ہوں، توکیا میرا ایسا کرنا صحیح ہے ؟

Published Date: 2003-11-09

جواب:

الحمد للہ
آپ کے لیے سفر میں چاررکعت والی نماز کو قصر کرنا ، اورظہروعصر کی نماز کو کسی ایک کے وقت میں جمع کرنا اورمغرب وعشاء کی نماز کو کسی ایک کے وقت میں جمع کرنا جائز ہے ، اور اسی طرح رمضان المبارک میں سفر پر ہونے کی وجہ سے روزہ چھوڑنا بھی جائز ہے ، لیکن بعدمیں ان کی قضاء واجب ہوگی ۔

کیونکہ اللہ تعالیٰ کا فرمان ہے

﴿وَمَن كَانَ مَرِيضًا أَوْ عَلَىٰ سَفَرٍ فَعِدَّةٌ مِّنْ أَيَّامٍ أُخَرَ﴾[البقرة:185]

’’اورجو کوئی مریض ہویا سفر پر وہ دوسرے دنوں میں گنتی پوری کرے‘‘۔[سورہ بقرہ:۱۸۵]

اوراللہ تعالیٰ ہی توفیق بخشنے والا ہے ۔ .

دیکھیں : فتاوی اللجنۃ الدائمۃ للبحوث العلمیۃ والافتاء ( 10 / 212 ) ۔

(مُحتاج دُعا:عزیزالرحمن ضیاء اللہ سنابلیؔ [email protected])

فیڈ بیک